تازہ ترینعلاقائی

سنجھورو:صحافیوں پر تشدد روز کا معمول بن گیا ہے حکومت کو اس کے لئے اقدمات کرنے کی ضرورت ہے، محمد علی شیخ

سنجھورو(نامہ نگار) موجودہ حالات میں زمہ دارانہ صحافت کی اشد ضرورت ہے ،غیر زمہ داری کی صحافت بے معنیٰ ہیں۔ راؤ وسیم اختر آزادی صحافت جمہورت کا حسن ہے صحافت کی آزادی کے بغیر جمہوریت نامکمل ہے۔محمد حنیف ملک۔ صحافیوں پر تشدد روز کا معمول بن گیا ہے حکومت کو اس کے لئے اقدمات کرنے کی ضرورت ہے۔محمد علی شیخ تفصیلات کے مطابق یو مِ صحافت کے عالمی دن کے موقع پرسندھ جرنلسٹ ویلفیئرفاؤنڈیشن سنجھور و کی جانب سے ایک ریلی کا اہتمام کیا گیا جوسندھ جرنلسٹ ویلفیئر فاؤنڈیشن سنجھور وکی آفیس سے شروع ہو کر شہر کے مختلف راستوں سے ہو تی ہوئی نیشنل پریس کلب پر اختتام پزیر ہوئی۔ اس موقع پرسندھ جرنلسٹ ویلفیئر فاؤنڈیشن کے مرکزی وائیس چیئر مین محمد حنیف ملک نے کہا کہ آزادی صحافت جمہوریت کا حسن ہے اور اس کے بغیر جمہوریت نامکمل رہتی ہے۔سندھ جرنلسٹ ویلفیئر فاؤنڈیشن ضلع سانگھڑ کے صدرراؤ وسیم اختر نے ریلی سے خطاب میں کہا کہ اس وقت ملک کے جو حالات ہیں ان میں ہم سب کا فرض ہے کہ ہم زمہ دارانہ صحافت کے فرائض انجام دیں کیونکہ غیر زمہ داری کی صحافت بے معنیٰ ہے۔سندھ جرنلسٹ ویلفیئر فاؤنڈیشن سنجھور و کے صدر محمد علی شیخ نے اپنے خطاب میں کہا کہ صحافیوں پر تشدد روز کا معمول بن چکا ہے جو کہ ایک انتہائی تشویش ناک امر ہے حکومت کی یہ اہم زمہ داری ہے کہ وہ ملک بھر میں صحافیوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے ضروری اقدامات کرے۔ریلی میں سنجھورو کے سینئر صحافیوں صابر علی قریشی، ڈاکٹر عبدالغفور ملک،شبیر احمد مجاہد غلام عباس خاصخیلی، امام بخش منگریو،محمد اختر ملک، رانا وقار حسین،فریاد احمد،امتیاز احمد کھرل،جمیل احمد قریشی سمیت دیگر نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔  

یہ بھی پڑھیں  آخرقصورکیا ہے؟

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker