پاکستانتازہ ترین

پنجاب سے سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جارہا ہے، وزیراعلیٰ پنجاب

لاہور (بیوروچیف) پنجاب میں لوڈشیڈنگ کے خلاف مینار پاکستان پر لگائے گئے احتجاجی کیمپ میں آج تیسرے روز بھی وزیراعلیٰ پنجاب افسران کے ساتھ موجود ہیں۔ وہ بس کے ذریعے کیمپ میں پہنچے۔ مینار پاکستان پر لوڈشیڈنگ کے خلاف احتجاجی کیمپ میں باجماعت پنکھے جھلنے کا آج تیسرا روز ہے۔ عام افراد تو برسوں سے یہ مشقت کر رہے ہیں ، وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے کابینہ ارکان اور افسران کو بھی چھٹی کا دودھ یاد دلا دیا۔ وزیراعلیٰ خود پنکھا جھل رہے ہوں تو جنریٹر چلانے کی جرات بھلا کون کرے اور تو اور حکومت کے معاملات بھی اسی کیمپ سے چلائے جا رہے ہیں۔  مینار پاکستان کے سائے میں احتجاج تو بہت ہوئے لیکن تاریخ میں شاید یہ پہلی مرتبہ ہوا کہ ایک وزیراعلیٰ نے کابینہ ارکان کے ساتھ دھرنا دیدیا۔ شہباز شریف کہتے ہیں کہ علی بابا اور چالیس چوروں کا دیا بجھنے تک عوام کا دیا نہیں جلے گا۔ اس سے پہلے میاں شہباز شریف گھر سے نکلے تو ان کی منزل بس اڈہ تھا، وہ ایئرکنڈیشن گرین بس میں چڑھے تو مسافر حیران رہ گئے۔ وزیراعلیٰ عام مسافروں کی طرح سیٹ پر بیٹھے تو کنڈیکٹر کرایا لینا بھول کر موبائل پر ان یادگار لمحات کو محفوظ کرنے میں مگن ہو گیا۔ وزیراعلیٰ نے ٹکٹ بھی کٹایا اور کنڈیکٹر سے بقایا بھی لیا۔ لیپ ٹاپ کا حقدار قرار پانے والا ایک طالب علم بھی انہیں بس میں مل گیا جس نے انہیں بریفنگ ہی دے ڈالی۔ وزیراعلیٰ کا بس میں سفر کھلی کچہری میں بدل گیا اور لوگوں نے شکایات کے بھی انبھار لگا دیئے۔ خادم اعلیٰ نے ٹھنڈے ٹھار سفر کا لطف اٹھایا، ڈرائیور کا کندھا تھپتھپایا اور مینار پاکستان پر بس سے اتر گئے۔

یہ بھی پڑھیں  19 اور 20 اگست کو چیئرمین عمران خان کادورہ لاہور شیڈول

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker