پاکستانتازہ ترین

(ن) لیگ کی مقبولیت میں اضافہ عوام کے اعتماد کا مظہر ہے،شہبازشریف

shahbazلاہور(نمائندہ خصوصی) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ اگر قیادت ایماندار،مخلص اور خدمت خلق کے جذبہ سے سرشار ہو تو لیپ ٹاپ، آشیانہ، دانش سکول، خود روزگار سکیم، انٹرن شپ پروگرام ، گرین ٹریکٹر، ییلوکیپ سکیم اور اجالا جیسے فلاحی اور انقلابی پروگرام سامنے آتے ہیں۔پنجاب حکومت نے صوبے میں جس تیز رفتاری اور شفافیت کے ساتھ عوام کی فلاح وبہبود کے منصوبوں پر عملدرآمد کیاہے،65برس کی تاریخ کے دوران اس کی کوئی مثال نہیں ملتی۔ہمارا ہر پروگرام شفافیت اور میرٹ کی گواہی دے رہاہے یہی وجہ ہے کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) ملک کی مقبول ترین جماعت بن چکی ہے اورمجھے یقین ہے کہ آئندہ عام انتخابات میں عوام پاکستان مسلم لیگ (ن) کے امیدواروں پر بھرپوراعتماد کااظہار کریں گے۔بین الاقوامی اداروں نے پاکستان مسلم لیگ(ن) کی پنجاب حکومت کی گڈ گورننس ، شفافیت اور میرٹ پر مبنی پالیسیوں کو لائق تحسین قرار دیاہے جبکہ مستند عالمی ادارے نے ملک بھر میں پاکستان مسلم لیگ(ن) کی مقبولیت میں مزید اضافے کے حوالے سے سروے رپورٹ جاری کی ہے اوریہ سروے رپورٹ 18 کروڑ عوام کی پاکستان مسلم لیگ(ن) کی حکومت کی کارکردگی پر بھر پور اعتما د کا اظہار ہے۔وہ ماڈل ٹاؤن میں مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے ارکان اسمبلی سے ملاقات کے دوران گفتگو کر رہے تھے۔انہوں نے کہاکہ پنجاب حکومت نے پونے پانچ برس کے دوران صوبے میں عوام کی فلاح و بہبود کے لئے متعدد منصوبے پر عملدرآمد کیا ہے اور ترقیاتی کاموں کے باعث عوا م کو ریلیف ملا ہے۔بین الاقوامی ادارے کے سروے کے بعد مقبولیت کے نام نہاد دعوے داروں کے کھوکھلے نعرے بے نقاب ہو گئے ہیں اور عوام آئندہ عام انتخابات میں بد ترین کرپشن اور لوٹ مار میں ملوث عناصر کو بری طرح مسترد کر دیں گے اور کرپشن کے بت ووٹ کی طاقت سے گرا دیں گے۔ وزیراعلی نے کہاکہ پنجاب حکومت نے صوبے میں میرٹ اور شفافیت کو فروغ دیا ہے۔ اگر مجھ پر ایک پیسے کی بدعنوانی ثابت ہو جائے تو میرا گریبان اورعوام کا ہاتھ ہوگا۔عوام کی خدمت کرنا میرا مشن ہے اور اس مشن کی تکمیل میں میری جان بھی چلی جائے تو کوئی پروا ہ نہیں۔ میں خود کو اﷲ تعالی اور عوام کی عدالت میں جوابدہ سمجھتا ہوں۔انہوں نے کہا کہ نوجوان قوم کے درخشندہ ستارے ہیں، ملک و قوم کا مستقبل ان سے وابستہ ہے، تعلیم ہی واحد راستہ ہے جس پر چل کر ملک کو ترقی و خوشحالی کی منزل سے ہمکنار کیا جاسکتا ہے۔ ہم نے اقتدار میں آتے ہی پنجاب میں فروغ تعلیم کو اپنی پہلی ترجیح بنایا اور تعلیمی شعبے کی ترقی کیلئے انقلابی اقدامات کئے۔ 4 سال قبل ملک کی تاریخ میں پہلی بار پنجاب ایجوکیشنل انڈومنٹ فنڈ قائم کیا گیا اور اس فنڈ سے ہر سال ایک ارب روپے ایسے بچوں اور بچیوں کی تعلیم پر خرچ کئے جا رہے ہیں جن کے والدین مالی مشکلات کے باعث اپنے بچوں کو تعلیم دلانے سے قاصر ہیں۔ آج یہ فنڈ 10 ارب روپے تک پہنچ چکا ہے۔ دو سال قبل 5ارب روپے کی لاگت سے صوبے کے 4300 ہائی سکولوں میں قائم کی گئی آئی ٹی لیبز سے پنجاب بھر کے لاکھوں طلبا و طالبات جدید علوم سے آراستہ ہو رہے ہیں۔ صوبے کے پسماندہ ترین علاقوں میں لاہورگرائمر، لمز اور نسٹ جیسے تعلیمی اداروں کے ہم پلہ دانش سکول قائم کئے گئے ہیں جو نہ صرف ان علاقوں سے انتہاپسندی کے رجحانات کو ختم کر رہے ہیں بلکہ پسماندہ علاقوں میں ترقی کے نئے دور کا آغاز ہو رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لیپ ٹاپ تقسیم کرنے کا پروگرام سو فیصد میرٹ پر مبنی ہے اور اگر میں بھی چاہوں تو کسی کو لیپ ٹاپ اپنی مرضی سے نہیں دے سکتا۔ لیپ ٹاپ رنگ، نسل اور مذہب سے بالاتر ہو کر صرف اور صرف میرٹ پر تقسیم کئے جا رہے ہیں۔ نوجوانوں کی فلاح و بہبود کیلئے شروع کئے جانے والے پروگراموں کا مقصد انہیں مکمل بااختیار بنانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری نیت صاف ہے اور قدم درست سمت اٹھ رہے ہیں۔ آشیانہ ہاؤسنگ سکیم ایسے افراد کیلئے شروع کی گئی ہے جن کے پاس بہت کم وسائل ہیں اور آج بے شمار خاندان اپنی چھت تلے باعزت زندگی گزار رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ2 ارب50 کروڑ روپے کی خطیر رقم سے سکولوں کے طلباو طالبات میں2 لاکھ سے زائد سولرلیمپس میرٹ پر تقسیم کئے جا رہے ہیں تاکہ بجلی کی بندش کے دوران وہ تعلیمی سرگرمیاں جاری رکھ سکیں اور زربابا چالیس چوروں کے دیئے ہوئے اندھیروں کواجالوں میں بدل دیں۔انہوں نے کہا کہ ماضی کے حکمرانوں نے پڑھے لکھے پنجاب کا نعرہ لگایا، اشتہارات پر اربوں روپے خرچ کئے اور تعلیم کے نام پر قومی وسائل کو بیدردی سے لوٹا۔ یہی وجہ ہے کہ ہم ملک کو قائدؒ اور اقبالؒ کا پاکستان نہیں بناسکے۔ اگر معاشی و معاشرتی انصاف، تعلیم اور امن و امان کی ٹرائی اینگل کو ٹھیک کرلیں تو کوئی وجہ نہیں کہ پاکستان اپنا کھویا ہوا مقام حاصل کرسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت نے شہریوں کو آرام دہ، پائیدار اور محفوظ سفری سہولیات کی فراہمی کیلئے میٹرو بس سروس کا عظیم الشان منصوبہ شروع کیا ہے جو جلد پایہ تکمیل کو پہنچنے والا ہے۔ میٹرو بس پراجیکٹ ملک میں ٹرانسپورٹ کے نظام کو بدل کر رکھ دے گا۔ سابق دور میں 230 ارب روپے کی لاگت سے انڈر گراؤنڈ ریپڈ ماس ٹرانزٹ کا کاغذی منصوبہ بنایا گیا اور ایک ارب روپیہ اس کی فزیبلٹی پر لگا یا گیا جس میں سے 40 کروڑ روپے غبن کئے گئے۔ پنجاب حکومت نے کروڑوں روپے غبن کرنے والے کو گرفتار کیا اور اسے کڑی سزا دلائی۔ انہوں نے کہا کہ جب تک دم میں دم ہے ملک و قوم کی خدمت کرتے رہیں گے ۔ پاکستان کو امداد لینے والا نہیں بلکہ امداد دینے والا ملک بنانے تک اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے

یہ بھی پڑھیں  سنجھورو میں سورج سوا نیزے پر،درجہ حرارت 47ڈگری پر پہنچ گیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker