پاکستانتازہ ترین

نوازشریف کے کہنے پراسمبلیاں تحلیل کروں گا: وزیراعظم شاہد خاقان عباسی

اسلام آباد(بیورو رپورٹ)وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے مخالفین کو واضح پیغام دے دیا، کہتے ہیں آئندہ عام انتخابات نواز شریف کے نام پر ہی لڑیں گے ۔اداروں کو اپنے دائرہ اختیار میں رہ کر کام کرنے کا مشورہ بھی دیا ۔ بولے کہ ججز کی تعیناتی سے پہلے اُنکے کردار پر بھی بحث ہونی چاہیے۔ جب سے عدلیہ کو جج لگانے کا اختیار ملا کرپٹ ترین جج لگ رہے ہیں۔ وزیراعظم نے پارلیمانی رپورٹرز سے گفتگو میں دوٹوک الفاظ میں کہا کہ نواز شریف ہی ن لیگ کی انتخابی مہم کی قیادت کریں گے ۔ اُن کی یا شہبازشریف کی تصاویر لگانے سے پارٹی کو ووٹ نہیں ملے گا۔ بولے کہ پارلیمنٹ کو کوئی خطرہ نہیں ۔ نہ ہی کوئی سازش ہو رہی ہے۔ نواز شریف یا پارٹی کہے گی تو ہی اسمبلی تحلیل کروں گا۔کوئی ایسا کرنا چاہتا ہےتو شوق سے کرے، کسی میں ہمت ہے تو تحریک عدم اعتماد لے کر آئے۔ شاہد خاقان عباسی نے این آر او سے متعلق کی خبروں کی بھی سختی سے تردید کی ۔ بولے ڈاکہ مارا نہ چوری کی ، این آر او کرنے کا کوئی ارادہ نہیں۔ یہ مشورہ بھی دیا کہ ہر ادارہ دائرہ کار میں رہ کر کام کرے، جس نے سیاست کا کھیل کھیلنا ہے ۔ وہ کھیل لے ۔ وزیراعظم نے ملک میں جوڈیشل ایکٹیوزم کا الزام بھی دہرا تے ہوئے کہا جب سے عدلیہ کو جج لگانے کا اختیار ملا کرپٹ ترین جج لگ رہے ہیں۔ ہر جج کا چہرہ عوام کے سامنے ہونا چاہیے۔ بولے سیاستدانوں کو نیب عدالتوں میں گھسیٹا جارہا ہے، پرویز مشرف سے پوچھنے والا کوئی نہیں۔ قصور میں زیادتی کے بعد قتل کی جانے والی سات سالہ بچی زینب کے قتل کیس سے متعلق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ افسوسناک واقعے کی تحقیقات میں پیشرفت ہو رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں  جے یو آئی (ف) کا (ن) لیگ کے امیدوار ممنون حسین کو ووٹ دینے کا فیصلہ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker