پاکستانتازہ ترین

ایک اور وکٹ گر گئی،شیری مزاری نے بھی تحریک انصاف چھوڑی دی

لاہور(نمائندہ پاک نیوز) پاکستان تحریک انصاف کی نائب خاتون صدر ڈاکٹر شیریں مزاری نے پارٹی پالیسی سےاختلافات کے بعد بنیادی رکنیت اور عہدے سے استعفی دے دیا۔ شیریں مزاری تحریک انصاف کی پالیسی سے سخت نالاں تھیں جس کا برملا اظہار انہوں نے راجن پور کے جلسہ میں عوام سے خطاب کرتے ہوئے بھی کیا۔
پارٹی پالیسی سے اختلاف پر شوکاز نوٹس ملنے کے بعدانہوں نے پارٹی کی رکنیت اور عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ دوسری جانب تحریک انصاف کے سیکرٹری جنرل عارف علوی نے اس بات کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ شیریں مزاری کو مخالف بیان بازی پر 19 ستمبر کو شوکاز نوٹس دیا گیاتھا، انہوں نے اس کے جواب میں استعفیٰ بھجوادیا ہے۔ علاوہ ازیں شیریں مزاری نے نجی ٹی وی چینلز سے گفتگو کرتے ہوئے پارٹی چھوڑ دینے کی تصدیق کرتے ہوئے کہاکہ وہ شوکاز نوٹس کا جواب دینا ضروری نہیں سمجھتی ہیں۔ انہوںنے یہ بھی کہا کہ عمران خان کو راجن پورنہ آنے پر عوام سے معافی مانگنی چاہیے۔ شیری مزاری کے بقول عمران خان کو جہانگیرترین جلسوں میں جانے کے لیے جہاز فراہم کرتے ہیں اور راجن پورکے لیے یہ سہولت نہ ملنے پر وہ جلسے میں نہیں آئے۔
شیری مزاری نے کہا کہ وہ عمران خان کی اب بھی عزت کرتی ہیں لیکن اگر وہ واقعی عوامی لیڈر بنناچاہتے ہیں تو انہیںپبلک ٹرانسپورٹ میں بھی سفر کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ وہ فی الوقت کسی جماعت میں شمولیت اختیار نہیں کررہی ۔ واضح رہے کہ شیری مزاری پاکستان کی قابل ترین خاتون میں سے ایک ہیں ، عالمی اور ملکی سیاست پر گہری نظر رکھتی ہیں ،انہیں بطور تجزیہ نگار مختلف چینلز پر مدعوکیا جاتاہے ، وہ امریکی پالیسی کے خلاف سخت مؤقف کے حوالے سے بھی جانی جاتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  صفر المظفراسلام کی نظر میں

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker