پاکستانتازہ ترینعلاقائی

سیالکوٹ: طاقت کا استعمال عالمی مسائل کا حل نہیں،ممتاز امریکی دانشور

Photo Anne V Roth Address to PCSW&HR Executive Body (1)سیالکوٹ (سعید پاشا) ممتاز امریکی دانشور اور انسانی حقوق کی راہنما اینی وی راتھ نے کہا ہے کہ طاقت کا استعمال عالمی مسائل کا حل نہیں بلکہ مذاکرات اور باہمی رواداری سے مسائل کا حل وقت کی ضرورت ہے کیونکہ وقت نے ثابت کیا ہے کہ طاقت کے استعمال سے ہمیشہ عالمی امن برباد ہو ا ہے اور انتقام کے جذبات نے دنیا میں انتہا پسندی اور دہشت گردی کو فروغ دیا ہے کشمیر اور فلسطین کے مسائل کا واحد حل ایک دوسرے کی خود مختاری اور را ئے کا احترام کرنے میں مضمر ہے وہ گذشتہ روز پاکستان کونسل فار سو شل ویلفیئر اینڈ ہیومن رائٹس کے آفس کے دورہ کے موقعہ پر پاکستان کونسل کی ایگزیٹو کمیٹی اور میڈیا کے نمائندوں سے خطاب کر رہی تھیں پاکستان کونسل فار سو شل ویلفیئر اینڈ ہیومن رائٹس کے چیئر مین محمد اعجاز نوری، ایگزیٹو ڈائریکٹر منصور احمد، ایگزیٹو کمیٹی کے ممبرا ن مشتا ق احمد قادری، چوہد ری محمد اعجاز ، محمد رمضان مصطفا ئی کے علاوہ مشائخ علماء کونسل کے ضلعی صدر ڈاکٹر مفتی نجیب احمد ہاشمی، محمد حنیف جنجوعہ، بیوٹی پارلر ایسوسی ایشن سیالکوٹ کی صدربیگم طاہرہ مشرف،ممتاز صحافیوں روف کلیم چشتی، بلال خان، جواد احمد اور دیگر راہنماؤں نے شرکت کی اینی راتھ جو کہ اقوام متحدہ کے ادارہ بر ائے بین الا مذاھب ہم آئینگی(یو آر آئی) امریکہ کی گلوبل کونسل کی وائس چیئر پرسن بھی ہیں نے مذید کہا کہ مثبت اور معیاری تعلیم کا فروغ پاکستان سمیت دنیا بھر میں دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لیے ضروری ہے عالمی حالات میں جہاں ممالک کے درمیان تجارت اور دیگر شعبوں میں تعلقات کا فروغ ضروری ہے وہاں دنیا میں قیام امن اور سماجی ترقی کے لیے بین الامذاھب تعلقات کا فروغ اور عوامی سطح پر رابطوں کا فروغ بھی وقت کی اہم ضرورت ہے لہذا پاکستان اور امریکہ میں عوامی سطح پر بین الامذاھب اورسماجی و ثقافتی تعلقات کو فروغ دیا جا ئے تا کہ دونوں ممالک کے عوام اور سو ل سو سائٹی باہمی اتحاد سے دنیا میں قیام امن اور سماجی ترقی کے لیے اپنا کردار ادا کر سکیں اُنہوں نے کہا کہ کستان کے خلاف ہمیشہ یہ غلط پراپوگنڈا کیا جاتا رہا ہے کہ یہاں کے لوگ تشدد پسند اور دہشت گرد ہیں اور پاکستان غیر ملکیوں کے لیے محفوظ ملک نہیں ہے لیکن اُنہوں نے پاکستان آ کر محسوس کیا ہے کہ پاکستانی قوم ایک پُر امن اور محبت کرنے والی قوم ہے اور پاکستان غیر ملکیوں کے لیے اُنتی ہی محفوظ جگہ ہے جتنا امریکہ غیر ملکیوں کے لیے محفوظ ہے اینی راتھ نے کہا کہ پاکستان سمیت ترقی یافتہ ممالک میں جمہوریت کا فروغ وقت کی اہم ضرورت ہے کیونکہ جمہوریت کے فروغ سے ہی عوام کی را ئے کا احترام ممکن بنایا جا سکتا ہے محمد اعجاز نوری نے کہا کہ دنیا میں قیام امن، ہمہ گیر سماجی ترقی اور بین الاقوامی بحرانوں کے حل کے لیے بین الا مذائب ہم آہئنگی وقت کی ضرورت ہے اور مذہبی کشمکش کو ختم کئے بغیر کسی بھی قسم کی ترقی ممکن نہیں لہذا ضرورت اس امرکی ہے کہ مذہب کی بنیاد پر تصادم کوانسانی سوچ پر حاوی نہ ہونے دیا جائے اور تمام مذائب کا احترام کیا جا ئے محمد اعجاز نوری نے مذید کہا کہ اسلام مذہبی رواداری امن و انصاف مساوات اور احترام آدمیت کا داعی مذہب ہے اور تمام دوسر ے مذائب کے احترام کا درس دیتا ہے مذہبی رواداری ، ایک دوسرے کے احترام اور مذہبی برداشت سے ہی ہم دہشت گردی اور انتہا پسندی سے نجات حاصل کر سکتے ہیں

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker