بین الاقوامیتازہ ترین

سری لنکا کی فوج کے ہاتھوں 3 مشتبہ ٹائیگر رہنما ہلاک

کولمبو(مانیٹرنگ سیل) اے ایف پی نے خبر دی کہ جمعہ (11 اپریل) کو فوج نے تین افراد کو گولیاں مار کر ہلاک کر دیا، جن کے بارے میں اس کا ماننا تھا کہ تامل ٹائیگر تحریک کے احیا کے لیے کوشاں تھے۔ فوج کے ترجمان برگیڈیئر روان ونیگاسوریا نے کہا کہ سپاہیوں نے ان تینوں کو قتل کیا کیوں کہ انہوں نے جنوبی جافنا کے ایک جنگلی علاقے میں عسکری حلقے سے فرار کی کوشش کی۔ انہوں نے یہ نہیں بتایا کہ آیا فوج میں کوئی جانی نقصان ہوا یا نہیں۔ ونیگاسوریا نے کہا کہ فوج کا ماننا ہے کہ ان میں سے دو، 31 سالہ کجیدیپن پونیاہ سیلیانایاگم، المعروف گوپی اور 36 سالہ نوارتنم نوانیتھن گزشتہ ماہ ایک پولیس افسر کو گولیاں مارنے اور زخمی کرنے کے لیے مطلوب تھے۔ حکومت کے محکمۂ اطلاعات نے جداگانہ طور پر گوپی کو شمال میں لبریشن ٹائیگرز آف تامل ایلام (ایل ٹی ٹی ای) کے ایک رہنما کے طور پر بیان کیا۔ ونیگاسوریا نے تصدیق کی کہ مئی 2009 میں حکومتی فورسز کی جانب سے ٹائیگر قیادت کا صفایا کیے جانے کے بعد یہ پہلی اہم گولی باری ہے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker