پاکستانتازہ ترین

این آئی سی ایل کیس: محسن حبیب وڑائچ کو گرفتار کرنے کا حکم

اسلام آباد(بیوروچیف) سپریم کورٹ نے این آئی سی ایل کیس کے ملزم محسن حبیب وڑائچ کا پاسپورٹ منسوخ کرکے انہیں انٹر پول کے ذریعے گرفتار کرنے اوران سے بیس کروڑ روپے برآمد کرنے کا حکم دے دیا ہے جبکہ این آئی سی ایل کے سابق چئیرمین کا تقرر درست قرار دیے جانے کی رپورٹ انساف کی راہ میں رکاوٹ حائل کرنے کے مترادف قرار دے کر مسترد کردی ۔چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے سماعت کا آغاز کیا تو ڈائریکٹر لیگل ایف آئی اے اعظم خان نے کیس میں تفتیش کے بارے میں پیش رفت پر مبنی رپورٹ عدالت میں پیش کی جس میں کہا گیا تھا کہ این آئی سی ایل نے انہیں کسی کی گرفتاری کی ہدایت نہیں کی ۔ چیف جسٹس نے اس رپورٹ کو گزشتہ رپورٹ کی فوٹوکاپی قرار دیتے ہوئے کہا کہ جب تک ادارے کے کل پرزے حرکت میں نہیں آئیں گے تب تک اس کیس کا کوئی نتیجہ نہیں نکلے گا ۔چیف جسٹس نے کہا کہ قانون کی نظر میں کوئی چھوٹا بڑا نہیں جو بھی ملوث ہے اسے گرفتار کیا جائے ۔ عدالت نے نو تعینات شدہ سیکرٹری تجارت منیر قریشی کو ہدایت کی کہ وہ اس کیس میں سپریم کورٹ کی جانب سے دیے گئے احکامات غور سے پڑھ کر عمل درآمد کریں اور دو ہفتے میں عدالت کو پیش رفت سے آگاہ کریں۔ مقدمے کی مزید سماعت دو ہفتے کے لیے ملتوی کردی گئی۔

یہ بھی پڑھیں  کالعدم تنظیموں کے 09مفرورفراریوں نے ہتھیار ڈال کر خودکوقانون کے حوالے کردیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker