علاقائی

ٹی بی اب لاعلاج مرض نہیں

﴾حاصل پور﴿ بیوروچیف پاکستان
ٹی بی اب لاعلاج مرض نہیں رہا ڈاکٹر ظفر اقبال خرم ایک لاکھ آبادی میں 233 مریض ٹی بی کے ہوتے ہیں عطرت بتول نیشنل ٹی بی کنٹرول پروگرام بہاول پور ۔تفصیل کے مطابق تحصیل حاصلپور ہیڈ کواٹر ہسپتال میں سوشل ویلفئیر پراجیکٹ کے زیراہتمامNTA کے تعاون سے ٹی بی کی آگاہی مہم کے سلسلے میںسمینار سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر ظفر اقبال خرم نے بتایا کہ اب اس سے گھبرانے کی ضرورت نہیں یہ مرض اب8ماہ کی مسلسل ادویات کے استعمال سے مریض مکمل صحت یاب ہو جاتا ہے ورنہ ایک مریض سالانہ10سے15نئے مریض تیار کرتا ہے۔ وفاقی وزیر میا ں ریاض حسین پیرذادہ کے تعاون سے پاکستان میں ٹی بی کی جدید ترین لیبارٹری بنائی گئی ہے جس میں ہر وقت عملہ خدمت کے لئے تیار رہتا ہے۔ عطرت بتول نے چند گذارشات پیش کیں۔ آخر میں ڈاکٹر نسیم الحق نے ٹی بی کی علامات کے بارے میں میں آگاہی دیتے ہوے بتایا کی رات کو ٹھنڈے پسنے آنا، وزن کا مسلسل کم ہونا، بلغم میں خون کا آنا،اور اکژ بخار کا رہنا شامل ہے ایسے مریض کو اپنا احتیاطً لیب ٹیسٹ کروانا ضروری ہوتا ہے تاکی ٹی بی کی تشخیض ہو سکے آخر میں محمد انوار الحق صدر الحق کمیونٹی ڈویلپمنٹ آرگنائزیشن نے ماہانہ رپورٹ پیش کی

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ :مسافروں سے زائد کرائے کی وصولی،اوور لوڈنگ کے خلاف موٹروے پولیس کا سخت ایکشن

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker