تازہ ترینعلاقائی

ٹیکسلا: تاجربرادری دو دھڑوں میں تقسیم، نئی قیادت کے انتخابات کے لئے جوڑ توڑ کا سلسلہ جاری

ٹیکسلا (نا مہ نگار)تاجر برادری دو دھڑوں میں تقسیم ہو گئی ،نئی قیادت کے انتخابات کے لئے جوڑ توڑ کا سلسلہ جاری ، الیکشن کا التوا مفاد پرستی کی سیاست اور اپنوں کو نوازنے کی پالیسی متعدہ انجمن تاجران کی جڑوں میں بیٹھ گئی ، اکثریتی تاجروں کا اعتماد بانی تنظیم انجمن تاجران پر بحال ہونے لگا ، ملک عمر حیات تنظیم کی فعالیت کیلئے سر گرم ،انوار چوک مارکیٹ سمیت دیگر ذیلی مارکیٹوں میں انجمن تاجران کی رکنیت سازی اور نئے نمائندوں کے چناو کے لئے ہنگامی اقدامات کا آغاز کردیا گیا،تفصیلا ت کے مطابق تاجر برادری واہ کینٹ واضح طور پر دو دھڑوں میں تقسیم ہوتی نظر آ رہی ہے، قبل ازیں تاجروں میں اتحاد اور اتفاق پیدا کرنے کے لئے متعدہ انجمن تاجران کا قیام عمل میں لایا گیا تھا،لیکن گزشتہ آ ٹھ سال میں نئے انتخابات سے راہ فرار اختیار کی گئی ، جس سے تاجروں میں بے چینی کی فضا پیدا ہو گئی ، دریں اثنا ء تاجر تنظیم کے متحرک رہنما ملک عمر حیات عرصہ دراز کے بعد ایک با ر پھر میدان میں کود پڑے اور واہ کینٹ کی بانی تنظیم انجمن تاجران کو رجسٹر کروانے کے بعد اس کی فعا لیت کے لئے سر گرم ہو گئے ، ملک عمر حیات نے متعدہ انجمن تاجران کے الیکشن التوا کو مقامی عدالت میں چیلنج بھی کیا جبکہ بعد ازاں دوستوں کے کہنے پر رٹ پٹیشن واپس کرلی ۔ملک عمر حیات کے میدان میں کود نے کے بعد متعدہ انجمن تاجران پر مسلط ٹولہ پھر سر جوڑ کر بیٹھ گیا ، اور ایک مرتبہ پھر تاجروں کو جھانسہ دینے کے لئے الیکشن بورڈ کی تشکیل کردی گئی، جس میں انہیں افراد کو دوبارہ الیکشن بورڈ کی زمہ داری سونپی گئی جو گزشتہ ادوار میں ایکشن لے التوا کا باعث بنے تھے، تاجروں کا کہنا ہے کہ صرف الیکشن کی رسم کو نبھانے کے لئے ایک مرتبہ پھر اداکار وہی مگر ڈرامے کا سکرپٹ تبدیل کردیا گیا ہے ، دوسری جانب موجودہ حا لات کو کیش کرنے کے لئے ملک عمر حیات نے انجمن تاجران کی فعالیت کے لئے تیزی سے دوڑ دھوپ کا آغاز کردیا اور تاجروں کی اکثریت حمایت حاصل کرنے میں کامیاب ہو گئے ہیں ، یہ کہنا قبل از وقت ہوگا کہ اونٹ کس کروٹ بیٹھتا ہے ، تاہم زمینی حقائق کو مد نظر رکھا جائے تو اس میں کوئی دو رائے نہیں کہ انجمن تاجران کے دوبارہ فعال ہونے کی وجہ سے تاجر برادری دو حصوں میں بٹ چکی ہے ، اس بات کی تصدیق کرنا کہ تاجروں کی نمائندہ تنظیمات ( متعدہ انجمن تاجران ، اور انجمن تاجران) میں سے کونسی تنظیم رجسٹر ہے ، کیونکہ ایک طرف سے دعو ہ کیا جا رہا کہ انجمن تاجران رجسٹر ہے اور متعدہ انجمن تاجران غیر رجسٹرڈ ۔ تاہم اس بات کا فیصلہ یا تو عدالت کر سکتی ہے یا شعور رکھنے والے تاجر ،لیکن یہ کہنا بے جا نہ ہو گا کہ تاجروں کے دو دھڑوں کی موجودگی میں مقامی انتظامیہ کے لئے یہ مشکل ضرور پیش آ ئے گئی کہ وہ کس تنظیم کو پروٹوکول دیں ، یا تاجروں کے مسائل کے حوالے سے کس تنظیم کے سربراہ کو مذاکرات کی ٹیبل پر مدعو کریں ، تاجروں کی دونوں تنظیموں کی جانب سے تابڑ توڑ حملوں کا سلسلہ جاری ہے ، جس سے بلواسطہ یا بلاواسطہ تاجر برادری متا ثر ہو رہی ہے، عہدوں کے حصول کے لئے جاری سرد جنگ تاجروں کی مشکلات میں مزید اضافے کا سبب بھی بن سکتی ہے اس زمن میں واہ کینٹ کی سیاسی سماجی اور مذہبی شخصیات کا کہنا ہے کہ وہ اس تنظیم کا ساتھ دیں گے جس کو تاجروں کی اکژیت کی حمایت حاصل ہو گی اب یہ تو وقت ہی بتا ئے گا کہ کونسی تنظیم تاجروں کی حمایت حاصل کرنے میں کامیاب ہو گی ۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker