پاکستانتازہ ترین

ٹیکسلا:نعوز باللہ ختم نبوت کا جھوٹا دعوہ کرنے والے 55 سالہ غلام عابد کو نامعلوم افراد نے گولیاں مار کر موت کے گھاٹ اتار دیا

ٹیکسلا(نامہ نگار)احاطہ ٹیکسلا میں نعوز باللہ ختم نبوت کا جھوٹا دعوہ کرنے والے 55 سالہ غلام عابد کو نامعلوم افراد نے گولیاں مار کر موت کے گھاٹ اتار دیا،اطلاع پر پولیس موقع پر پہنچ گئی نعش کو سول ہسپتال ٹیکسلا میں پوسٹمارٹم کے بعد ورثاء کے حوالے کردیا گیا،تفصیلات کے مطابق احاطہ ٹیکسلا میں محمدی کباب جس کا نام بعد میں مدینہ کباب رکھ لیا گیا کے نام سے دکان کرنے والا احاطہ ٹیکسلا کا رہائشی غلام عابد ولد غلام عاشق جس پر 2011 میں شان رسالتﷺ کی توہین پر تھانہ ٹیکسلا میں زیر دفعہ 299-C کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا موصوف نے ختم نبوت کا جھوٹا دعوہ کیا تھا جس پر لوگوں نے اس جسارت پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے مقامی پولیس سے مقدمہ کے اندارج کا مطالبہ کیا تھا بتایا جاتا ہے کہ غلام عابد کذاب مذکورہ مقدمہ میں دو سال سے زائد جیل میں رہا جبکہ کچھ عرصہ قبل اسے زہنی توازن کا فائدہ دیتے ہوئے ضمانت پر رہا کیا گیا تھا بدھ کے روز صبح کے وقت غلام عابد کزاب کو علاقہ عثمان کھٹر ریلوے لائن کے قریب نامعلوم افراد نے گولیوں سے چھلنی کردیا زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے وہ موقع پر دم توڑ گیا،مقتول غلام عابد کے بھائی غلام ابرار کی مدعیت میں تھانہ ٹیکسلا میں نامعلوم افراد کے خلاف زیر دفعہ 302 کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا،

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!