شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / ٹیکسلا:کنٹونمنٹ بورد واہ کینٹ کے مکین مسائل سے دوچار، سینٹری ورکرز افسران کے گھروں اور نجی کاموں میں مصروف

ٹیکسلا:کنٹونمنٹ بورد واہ کینٹ کے مکین مسائل سے دوچار، سینٹری ورکرز افسران کے گھروں اور نجی کاموں میں مصروف

ٹیکسلا(رپورٹ ڈاکٹر سید صابر علی)کنٹونمنٹ بورد واہ کینٹ کے مکین مسائل سے دوچار ، سینٹری ورکرز افسران کے گھروں اور نجی کاموں میں مصروف ،جا بجا کوڑے کرکٹ کے ڈھیر مہلق بیماریوں کا سبب بننے لگے،ٹیکس دینے کے باوجود ہمارے مسائل جوں کہ توں ہیں،کرپٹ افسران کے ستائے مکین پھٹ پڑے،لالہ رخ میں گزشتہ دس روز سے کھدا سیوریج کا گٹر کینٹ بوردڈکی عدم توجہ سے مکینوں کے لئے وبال جان بن گیا ، درخواست دینے کے باوجود کینٹ حکام مسلسل ٹال مٹول سے کام لے رہے ہیں ، کھلے گڑے میں گر کر کئی بوڑھے مرد خواتین اور بچے گر کر زخمی ہوچکے سیکرٹری کینٹ بورڈ معاملہ سے بے خبر شکائت کے باوجود معاملہ کے حل پر کوئی توجہ نہیں دی،مکینوں کا چئیرمین پی او ایف بورڈ سے اصلاح احوال کامطالبہ،تفصیلات کے مطابق لالہ رخ اور اسکی مضافاتی آبادیوں کے مکین کینٹ بورڈ افسران کے ناروا رویہ کے خلاف سراپا احتجاج ہیں مکینوں کا کہنا ہے کہ ہم سے ہر قسم کے ٹیکس لئے جاتے ہیں مگر مسائل کے حل پر کوئی توجہ نہیں دیتا ، کینٹ بورڈ میں رشوت کا بازار گرم ہے ٹیکس دینے والے مکینوں کو نظر انداز جبکہ رشوت دینے والوں کا فوری کام کردیا جاتا ہے مکینوں کا کہنا تھا کہ کینٹ ایگزیکٹیو آفیسر سے ملنا جوئے شیر لانے کے برابر ہے۔ایگزیکٹیو آفیسر سیٹ سے غائب ہوتے ہیں جبکہ اسسٹنٹ سیکرٹری کینٹ بورڈ سرور چوہدری عوامی شکایات پر کوئی کان نہیں دھرتے کہتے ہیں کہ میرے بس کی بات نہیں ،جبکہ رشوت خور اہلکار موجیں کرتے نظر آتے ہیں، جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر ہیں مگر صفائی کا عملہ کام سے غائب افسران کی پرائیویٹ یا اپنے نجی کاموں میں مصروف رہا ہے گندگی کی وجہ سے مختلف مہلق بیماریاں پھیل رہی ہیں،ادہر کینٹ انجینیر عتیق اور اسسٹنت انجینئیر ملک وقار دفتر سے غائب رہتے ہیں کوئی شکائت لیکر جائے تو کہتے ہیں پہلے ہم سے ملاقات کا وقت لو پھر آنا ، لالہ رخ ڈی ٹائپ کے قریب ایک مکان کا سیوریج لائن بند ہے اپنی مدد آپ مکے تحت لائن کھلانے کی کوشش کی مگر قدیمی لائن چوک ہوچکی تھی ، دس روز سے زائد مذکورہ مکان پر لائن کی گٹر کی صفائی کے لئے کھدا گٹر تاحال اسی طرح کھلا پڑا ہے ادہر مکین کی جانب سے دفتر میں تحریری درخواست جمع کرائی گئی جس میں استداء کی گئی کہ مذکورہ لائن بند ہے لہذا سامنے بارہ فٹ کے فاصلہ پر مین لائن میں سیوریج ڈالنے کے لئے منظوری دی جائے ،جو وہ اپنے خرچ پر کرنا چاہتے ہیں مگر کینٹ بورڈ حکام بشمول انجینئیرز اور اسسٹنٹ سیکرٹری معاملہ سے چشم پوشی اختیار کئے ہوئے ہیں گڑا کھلا رہنے کی وجہ سے کئی بوڑھے مرد خواتین اور سکول کے بچے گر کر زخمی ہوچکے ہیں مکینوں کا کہنا ہے کہ کھلا گٹر کسی بڑے حادثہ کا موجب بن سکتا ہے جس کی بابت کینٹ سیکرٹری اور انجینئیرز کو بتایا جاچکا مگر تمام افسران رشوت نہ دینے کی بنا پر تاخیری حربے اختیار کر رہے ہیں ادہر لوگوں کا کہنا ہے کہ مذکورہ گڑا کے سامنے واقعہ مکان میں غیر قانونی پانی کے کنکشن ہیں ایک ڈی ٹائپ جبکہ دوسرا ای ٹائپ کی لائن سے لیا گیا مگر کینٹ بورڈ حکام کے نوٹس کے باوجود تاحال اس پر کوئی کاروائی نہ کی گئی مکینوں کا کہنا ہے کہ کینٹ بورڈ اہلکار ماہانہ بنیادوں پر بھتہ وصول کرتے ہیں اسی لئے انھوں نے معاملہ آشکار ہونے کے باوجود چپ سادھ رکھی ہے،ادہر واہ کینٹ کے کئی پارکوں کی حالت نی گفتہ بہ ہے کینٹ اہلکار نہ ہی اس کی تعمیر پر توجہ دے رہے ہپیں بلکہ کوئی دیکھ بھال بھی نہیں کی جارہی جسکی وجہ سے پارک جنگل کا منظر پیش کر رہا ہے ،نواب آباد بازار میں میں ناجائز تجاوزات نے انسانی زندگی اجیرن بنا رکھی ہے ،لوگوں کا پیدل چلنا محال ، ریڑھی بانوں اور ٹھیہ والوں نے انت مچا رکھی ہے کینٹ اہلکار ان سے ماہانہ بھتہ وصول کرتے ہیں ۔ لوگوں کے منع کرنے پر قبضہ مافیا ان سے جھگڑا کرتا ہے اور بر ملا جواب دیا جاتا ہے جو کرنا ہے کر لو ہمیں کوئی مائی کا لال یہاں سے ہٹا نہیں سکتا ،افسران کے نوٹس لینے پر انفورسنمنٹ کا عملہ تھوڑی دیر کے لئے تجاوازت ہٹانے کا کہ دیتا ہے مگر چند لمحوں بعد حالات اسی طرح ہوتے ہیں ،عوام نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ عوام کو درپیش مسائل سے نکالا جائے اور محکمہ میں موجود کرپٹ افسران کا یہاں سے فوری تبادلہ کیا جائے جو عوام کے لئے پریشانی کے باعث بن رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  ساہیوال : مکان سے ماں بیٹی کی لاشیں برآمد، 3 روزپہلے قتل کیا گیا