تازہ ترینعلاقائی

ٹیکسلا:واہ کینٹ اور اسکی مضافاتی آبادیوں میں صفائی کا ناقص نظام، مہلک بیماریاں پھیلنے کا خدشہ

ٹیکسلا( ڈاکٹر سید صابر علی/نامہ نگار)واہ کینٹ اور اسکی مضافاتی آبادیوں میں صفائی کا ناقص نظام، مہلک بیماریاں پھیلنے کا خدشہ ، مکین کینٹ بورڈ کے ناروا رویہ کے خلاف سراپا احتجاج ، متعدد مقامات پر سیوریج کی لائنیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار،گٹر سے نکلنے والا گندا پانی مکینوں کے لے وبال جان بن گیا، کینٹ بورڈ حکام نے چپ سادھ لی ، واہ کینٹ مسائلستان بن گیا،انجیئینرز کی ٹال مٹول ، تاخیری حربوں سے مسائل بڑھنے لگے، ڈی جی کینٹ بورڈ سے ذمہ داران کے خلاف سخت محکمانہ کاروائی اور فوری اصلاح احوال کا مطالبہ، لالہ رخ ای ٹائپ میں سیوریج لائن کی بندش ، کھلا مین ہول حادثات کا موجب بننے لگا ،ایک ماہ گذرنے کے باوجود کرپٹ افسران کے سروں پر جوں تک نہیں رینگی، انجیئینرز کی ملی بھگت نے مکینوں کو گھمبیر مسائل سے دوچار کر رکھا ہے،انوار چوک علامہ اقبال سکول کے سامنے بھی سیوریج کا مین ہول عرصہ دراز سے کھلا پڑا ہے ، نکاسی آب کی بندش نے مکینوں کو ناک و چنے چبو ادیئے ، کینٹ بورڈ خواب غفلت میں ہے ، جگہ جگہ کوڑے کے ڈھیر صفائی کا عملہ غائب افسران کی پھٹیکوں اور اپنے نجی کاموں میں مصروف ہے ، سنیٹری ورکرز ک وکوئی پوچھنے والا نہیں،علاقہ میں تعفن پھیلنے کا خدشہ بڑھ گیا، مکینوں کا کہنا ہے کہ رشوت کے بغیر کوئی کام نہیں کیا جاتا ، جمیل آباد ، محبت آباد ، بدھو ، گدوال ،نواب آباد ، منیر آباد، آصف آباد ،احمد نگر،سمیت متعدد واہ کینٹ کی مضافاتی آبادیوں نے اعلیٰ حکام سے اپیل کی ہے کہ ٹیکس دینے کے باوجود ہمارے مسائل پر کوئی توجہ نہیں دی جارہی ،جائز کام کرانے کے لئے بھی رشوت دیناپڑتی ہے، انجنئیرز عتیق ، ملک وقار اور دیگر عملہ نے رشوت کا بازار گرم کر رکھا ہے، مٹھی گرم کرنے والوں کو وی وی آئی پی پروٹوکول دیا جاتا ہے جبکہ جائز کام کرانے والوں کو رشوت نہ دینے پر ٹال مٹول سے کام ،لیا جاتا ہے ، مکینوں نے ڈی جی کینٹ بورڈ ، وفاقی وزیر چوہدری نثار علی خان ، وزیر اعظم پاکستان ، وزیر اعلیٰ پنجاب سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ ایسی صورتحال میں واہ کینٹ کی مضافاتی آبادیوں کو کنٹونمنٹ بورڈ واہ سے الگ کر کے ٹیکسلا میونسپل کمیٹی میں شامل کیا جائے تاکہ ان کے مسائل حل ہوں ،لوگوں کا کہنا ہے کہ کینٹ بورڈ میں اکثریت وہ اہلکار ڈیوٹیاں کر رہے ہیں جو مختلف کرمنل کسیوں میں ملوث ہیں ،اور یہی لوگ افسران کے کارخاص بنے ہوئے ہیں جو رشوت ستانی ، لوٹ مار ، فراڈ میں اپنا کوئی ثانی نہیں رکھتے ،کینٹ بورڈ میں عوامی نمائندگی نہ ہونے سے مسائل بڑھ رہے ہیں ، حکومت عوامی مسائل کے حل کے لئے کینٹ بورڈ میں عرصہ دراز سے التواء انتخابات کو ممکن بنانے کے لئے ٹھوس اقدامات کرے ،اور یہاں تعینات کرپٹ افسران کے کا قبلہ درست کرنے کے لئے سخت محکمانہ کاروائی عمل میں لائی جائے،

یہ بھی پڑھیں  رینالہ خورد:گھریلو ملازمہ نے مالکن کے جوائنٹ اکاؤنٹ سے بذریعہ چیکس 33لاکھ روپے اپنے اکاؤنٹ میں ٹرانسفر کرا لیے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker