تازہ ترین

جامعہ کراچی میں ملائشیا کے سائنسدانوں کی آمد کا سلسلہ شروع

university of karachiکراچی(نامہ نگار) ملائشیا کے نمایاں تعلیمی ادارے یونیورسٹی آف ملایا، ملائشیا(University of Malaya (UM), Malaysia)، نے اپنے سائنسدانوں کوتحقیقی و سائنسی تربیت دلوانے کے لیے جامعہ کراچی کے نامور تحقیقی ادارے بین الاقوامی مرکز برائے کیمیائی و حیاتیاتی علوم (آئی سی سی بی ایس) جامعہ کراچی کے تجربات اور سہولیات سے فائدہ اُٹھانے کے فیصلہ کے بعد اسکالروں کو جامعہ کراچی بھیجنے کا سلسلہ شروع کردیا ہے، یونیورسٹی آف ملایا اسلامی دنیا کی واحد یونیورسٹی ہے جس کا شمار دنیا کی 100 بہترین جامعات میں ہوتا ہے، فیصلہ گزشتہ سال نومبر کے مہینے میں کالالمپور میں ہوا تھا، معاہدہ کے مطابق ملائشیا کے گیارہ سائنسدان اب تک بین الاقوامی مرکز سے دو سے تین مہینے کی سائنسی تربیت حاصل کرچکے ہیں۔ یہ بات آئی سی سی بی ایس جامعہ کراچی کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹرمحمد اقبال چوھدری نے جمعرات کوبین الاقوامی مرکز کا دورہ کرنے والے محققین کے ایک وفد سے گفتگو کے دوران کیا۔ ڈاکٹر اقبال چوھدری نے وفد کو بتایا کہ یونیورسٹی آف ملایا کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر گوط جیمسن نے میٹینگ میں آئی سی سی بی ایس جامعہ کراچی کے اپنے دورے کا ذکر کرتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستان کے اس تحقیقی ادارے میں اعلیٰ معیار کا تحقیقی کام ہورہاہے جو انتہائی قابلِ قدر ہے۔ ڈاکٹر اقبال چوھدری نے کہا کہ یونیورسٹی آف ملایا نے یورپین اور امریکی تعلیمی و تحقیقی اداروں کے بجائے ہمارے ادارے کا انتخاب کیا ہے، جبکہ یونیورسٹی آف ملایا نے اس ٹریننگ کے لیے کثیر رقم مختص کردی ہے، ملائشیا کے سائنسدان جدید سائنسی علوم بشمول فارماکولوجی، نیچرل پروڈکٹ کیمسٹری وغیرہ میں ٹریننگ کرسکینگے، ملائشیا میں یونیورسٹی آف ملایا ایک معتبر اور قدیم تعلیمی ادارہ تصور کیا جاتا ہے جہاں 2500 تدریسی اراکین سرگرم عمل ہیں، جبکہ اس ادارے کا شمار اسلامی دنیا کے چند بڑے اداروں میں ہوتا ہے، سلطان ازلان شاہ اس ادارے کے چانسلر ہیں، انھوں نے کہا یونیورسٹی آف ملایاکے سائسندانوں کو تربیت دینا نہ صرف جامعہ کراچی بلکہ پورے پاکستان کے لیے اعزاز کی بات ہے ۔

یہ بھی پڑھیں  ٹیکسلا کینٹ میں ہفتہ صفائی کا آغاز کردیا گیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker