تازہ ترینعلاقائی

اردو زبان کوبطوردفتری زبان اختیارکرنے ہائی کورٹ میں رٹ دائر

لاہور﴿نامہ نگار﴾لاہور ہائی کورٹ میں رانا علم الدین غازی ایڈووکیٹ نے اردو کو بطور دفتری زبان اختیار کرنے کے لئے رٹ درخواست دائر کردی، درخواست میںموقف اختیار کیا کہ آرٹیکل 251 کے تحت اردو زبان کو جو کہ قومی زبان ہے دفتروں میں بطور دفتری زبان رائج کی جائے گی کیونکہ آرٹیکل 251 کے تحت 1973 کے آئین میں یہ قانون واضح لکھا ہے کہ 15 سال کے اندر اندر اردو کو بطور دفتری زبان لاگو کردیا جائے لیکن عرصہ 40سال گزرنے کے باوجود قانون پر عمل نہیں ہوا جس سے پاکستانی قوم شدید مشکلات کا شکار ہے جس کی سب سے بڑی وجہ شرح خواندگی میں کمی ہے اور عام آدمی یا تو پڑھا لکھا نہیں یا پھر انگلش کو بہتر طور پرسمجھ نہیں پاتا جس سے ملک میں ترقی کی رفتار انتہائی سست روی کا شکار ہے، قوم کی ذہنیت نہ مشرقی رہی ہے اور نہ مغرب میں زعم ہو سکی ہے اور عوام کو پتہ نہیں چلتا کہ دفتری معاملات خصوصاً عدالتوں میں کون سے مقدمات پر فیصلے ہو رہے ہیں اور وہ وکلائ اور پڑھے لکھے لوگوں کے محتاج ہو کر رہ گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  عالم میں تجھ سے لاکھ سہی تُو مگر کہاں؟

یہ بھی پڑھیے :

One Comment

  1. ڄناب صدر صاحب تے گورنر کھوسہ صاحب!

    ١۔اسلام آباد تے کراچی وچ اردو یونی ورسٹی ھے پئی۔ہک سرائیکی میڈیم :سرائیکی یونیورسٹی برائے صحت انجینئرنگ تے سائنس آرٹس ٻݨاؤ جیندے کیمپس ہر وݙے شہر وچ ھوون۔.

    ۔٢.۔ تعلیمی پالسی ڈو ھزار نو دے مطابق علاقائی زباناں لازمی مضمون ھوسن تے ذریعہ تعلیم وی ھوسن۔ سرائیکی بارے عمل کرتے سرائیکی کوں سکولاں کالجاں وچ لازمی کیتا ونڄے تے ذریعہ تعلیم تے ذریعہ امتحان بݨاؤ۔.

    ٣۔سرائیکی کوں قومی زبان دا درجہ ڈیوو.۔.

    ۔٤۔ نادرا سندھی اردو تے انگریزی وچ شناختی کارݙ جاری کریندے۔ سرائیکی وچ وی قومی شناختی کارڈ جاری کرے۔.

    ۔٥۔ ھر ھر قومی اخبار سرائیکی سندھی تے اردو وچ شائع کیتا ونڄے۔کاغذ تے اشتہارات دا کوٹہ وی برابر ݙتا ونڄے۔.

    ۔٦۔ پاکستان دے ہر سرکاری تے نجی ٹی وی چینل تے سرائیکی، سندھی، پشتو ، پنجابی،بلوچی تے اردو کوں ہر روز چار چار گھنٹے ݙتے ونڄن۔.

    ۔٧۔سب نیشنل تے ملٹی نیشنل کمپنیاں سرائیکی زبان کوں تسلیم کرن تے ہر قسم دی تحریر تے تشہیر سرائیکی وچ وی کرن۔.

    ۔٨۔۔سرائیکی ہر ملک وچ وسدن ایں سانگے سرائیکی ہک انٹر نیشنل زبان اے۔ سکولاں وچ عربی لازمی کائنی ، تاں ول انگریزی تے اردو دے لازمی ھووݨ دا کیا ڄواز اے؟.

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker