تازہ ترینعلاقائی

وہاڑی:ڈی ایچ کیو درجہ چہارم ملازمین کے ساتھ ہتک امیز رویہ برتے اور اضافی ڈیوٹی لینے پر ملازمین کا ایم ایس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

وہاڑی(نامہ نگار)ڈی ایچ کیو درجہ چہارم ملازمین کے ساتھ ہتک امیز رویہ برتے اور اضافی ڈیوٹی لینے پر ملازمین کا ایم ایس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ مردہ باد گو ایم ایس گو کے نعرے مذہبی و سیاسی جماعت کے آ ؤٹ سائیڈ نے ایم ایس کے حق میں نعرے بازی کرنا شروع کردی گشیگی بڑھنے پر پولیس کی اضافی نفری طلب جھڑپ ہوتے ہوتے رہ گئی ایم ایس نے غنڈے بلوائے مظاہرین کا الزام۔ڈیوٹی نہ کرنے والے ملازمین کے خلاف ایکشن لیاکام چور ملازمین کو محکمہ میں رہنے نہیں دوں گا اگر نظام بہتر کرنا ہے تو مافیا کا اثرو ثروخ ختم کرنا ہوگا ایم ایس کا مؤقف تفصیل کیمطابق ڈی ایچ کیو میں درجہ چہارم کے ملازمین نے ایم ایس ڈی ایچ کیو ڈاکٹر فاروق جاوید کے خلاف مرکزی گیٹ کے سامنے احتجاجی مظاہرہ اور دھرنا دیا مظاہرین کیمطابق ایم ایس درجہ چہارم کے ملازمین کو اپنا ذاتی ملازم سمجھ کر کام کرواتا ہے ڈیوٹی ختم ہونے کے بعد دوبارہ بلواکر کام کرواتا ہے اور ذلیل و خوار کرتا ہے اگر اضافی ڈیوٹی دینے سے انکارکریں تو انتقامی کاروائیاں کرتے ہیں مظاہرین کوثر بی بی کیمطابق رات تین بجے ڈیوٹی ختم کرنے کے بعدجیبوں کی تلاشی لی جاتی ہے ڈیوٹی ختم ہونے کے بعد بلاوجہ فرش پر پانی ڈلواکر کہا جاتا ہے کہ صفائی کرتے رہو بیٹھنے کی کوئی اجازت نہیں مظاہرین کیمطابق ایم ایس ڈاکٹر فاروق نے انہیں کہا کہ مجھے درجہ چہارم ملازمین سے سخت نفرت ہے بغیر اجازت واش روم نہیں جاسکتے کھانا نہیں کھا سکتے کیوں ہمارا خون چوسنے کیلئے اس ببر شیر کو بھیجا گیا ہے اب موجودہ ایم ایس کی سربراہی میں نظام نہیں چلنے دیں گے یا ایم ایس کا تبادلہ کیا جائے یا ہمیں تبدیل کیا جائے مظاہرین نے بتایا کہ ایم ایس خود ایک مذہبی و سیاسی جماعت کا عہدیدار رہا ہے اور ہمارے ساتھ لڑانے کیلئے انہوں نے پرائیویٹ افراد کو بلوایا پرائیویٹ افراد کی بلاجواز کار سرکار میں مداخلت کہاں کا قانون ہے مظاہرین نے ایم ایس مردہ آ باد اور گو ایم ایس گو کے نعرے بھی لگائے دونوں اطراف سے کشیدگی بڑھنے پر پولیس کی اضافی نفری طلب کرلی گئی ڈی ایس پی صدر عمران رشید،ایم ایس اوز سٹی رانا نیک،دانیوال سوار خان نے موقع پر پہنچ کر مظاہرین کو منتشر کیا بعد ازاں ایم ایس ڈاکٹر فاروق نے اپنے آفس میں ڈاکٹروں اور میڈیا کے نمائندوں کو بتایا کہ ہسپتال میں بااثر مافیا نے اپنے پنجے گاڑھے ہوئے ہیں کرپٹ نظام کی ہر کوئی حمایت کرتا ہے نظام کو بہتر کرنے کیلئے اکیلا میں کچھ نہیں کرسکتا درجہ چہارم کے ملازمین سے ایمانداری کی ڈیوٹی کروانے پر احتجاج کروایا جارہا ہے جو ون وے ہے ایسے ملازمین کو میں ہرگز برداشت نہیں کر سکتا امر قابل ذکر ہے کہ ایم ایس نے اپنے کمرے میں تقریباً 2گھنٹے تک معاملات کے حل کیلئے میٹنگز اور ڈاکٹروں سے گفتگو کی مگر مظاہرین کیساتھ کوئی مذاکرات کرنے کی نوبت بھی گوارہ نہ کی جو ایم ایس کی نااہلی اور مس منیجمنٹ کا منہ بولتا ثبوت ہے بعدازاں لیگی رہنما زاہد اقبال چوہدری،سٹی کونسلر عمار اعجاز نے بھی مظاہرین سے مذاکرات اور مسائل کے حل کی یقین دہانی کرائی۔

یہ بھی پڑھیں  وہاڑی: مرکزی انجمن تاجران اور انجمن آڑھتیاں کے زیراہتمام غلہ منڈی میں محمدی دسترخوان پر افطاری کا اہتمام جاری

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker