پاکستانتازہ ترین

اٹھارہ سو سی سی اور اس سے بڑی گاڑیوں پر ریگولیٹری ڈیوٹی ختم

carپاکستان درآمد (مانیٹرینگ سیل)کی جانے والی ری کنڈیشنڈگاڑیوں کی عمر کی حد کبھی زیادہ کبھی کم۔۔نئے وزیر خزانہ نے نیا اشارہ دے دیا۔۔ری کنڈیشنڈ گاڑیاں سستی ہونے کا امکان۔ وزیر خزانہ سلیم مانڈوی والا کے مطابق درآمدی گاڑیوں کی ایج لمٹ کم کرنے سے حکومتی ریونیو میں کمی آئی ہے۔پیر کو اسلام آباد میں آل پاکستان موٹرز ڈیلرز ایسوسی ایشن کے پانچ رکنی وفد اور وزیر خزانہ کے مابین اہم مذاکرات ہوئے۔ ایسوسی ایشن کے چئیرمین ایچ ایم شہزاد کا کہنا ہے کہ درآمدی گاڑیوں کی ایج لمٹ دوبارہ 5 سال کئے جانے کا امکان موجود ہے ۔ وزیر خزانہ نے مثبت رویے کے ساتھ بتایا ہے کہ صدر اور وزیراعظم سے مشاورت کے بعد اس بارے میں حتمی فیصلہ کیا جائےگا۔اگر ایسا ہوتا ہے تو نہ صرف ری کنڈیشنڈ بلکہ نئی گاڑیوں کی قیمتوں میں بھی کمی آئے گی۔مذاکرات میں درآمدی گاڑیوں پر فرسودگی الاؤنس کے حوالے سےکسٹم جنرل آرڈر13 واپس لینے کا فیصلہ کیا گیا جبکہ پندرہ دسمبر کے بعد آنے والی پورٹ پر پھنسی 400 گاڑیاں ریلیز کرنے کی بھی یقین دہانی کرادی گئی ہے۔ وزیر خزانہ کے مطابق اٹھارہ سو سی سی اور اس سے بڑی گاڑیوں پر ریگولیٹری ڈیوٹی ختم کردی جائے گی ۔ این ٹی این کے خاتمے سے ہر فروخت شدہ گاڑی کا ریکارڈ نادرا کے پاس آئے گا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button