علاقائی

وہاڑی:جعلی کالجوں سے ڈگری حاصل کرکے عمدہ کلینک بنا کر عوام کو لوٹا جا رہا ہے

وہاڑی﴿        بیوروچیف﴾ وہاڑی میں ڈ سپنسر ، جعلی کالجوں سے میڈ یسن کی ڈ گری حا صل کر کے وی آ ئی پی کلنک بنا کر سا دہ لوح عوا م کو د ھو کہ د ینے میں مصروف سیکڑوں جعلی ڈا کٹروں کو خو د غر ضی کی بنا پر مہمل امراض کا شکار ہو چکے ہیں بعض د نیا سے جا سکے ان خیا لا ت کا اظہار ، شہر یوں ،سماجی ر ہنما ، نے و ز یر اعلیٰ پنجا ب ،ڈرا یکٹر ہیلتھ سر وسز پنجا ب اور چیف سیکر ٹری سے مطا لعہ کر تے ہو ئے عطا ئیت مضبو ط تر ادارے کمزور تر کے عنوا ن سے کئے گئے سروے میں کیا صدر مر کزی انجمن تا جرا ن چو ہدری ساجد علی آ صف نے کہا ہے کہ یہ لو گ ایک ما فیا کی شکل اختیار کر چکے ہیں را توں رات امیر بننے کی ا ند ھی خوا ہش میں کینسر تک کا اعلاج کر نے کا د عویٰ کر کے مر یضوں کو آ خری پو نجی لیکر انہیں مو ت کے منہ میں پہنچا نے میں مصروف ہیں جو نا قا بلِ مذ مت ہے ادارے اپنے کار کر د گی د کھا ئیں ، مر کزی انجمن تا جرا ن وہاڑی کے جنر ل سیکر ٹری طا ہر شر یف گجر نے کہا ہے کہ قیا م پا کستا ن کے و قت سے حفظا نِ صحت اور عطا ئیت سا تھ سا تھ چل رہی ہے حالا نکہ جعلی ڈا کٹروں کے خلا ف کاروا ئی اصل مسیحا ئی ہے لیکن صحت کا محکمہ ان افراد کی لوٹ مار پر چشم پو شی کر تا ہے سید ر فا قت علی شاہ ایڈ وو کیٹ نے کہا ہے کہ عدا لتوں میںڈگری ہو لڈرز ڈا کٹروں کے خلاف کبھی کیسز کبھار کیسز ہو تے ہیں لیکن اصل مجرم عطا ئی ہیں اور ان کی سر پر ستی بعض ڈا کٹر بھی کر تے ہیں کا شف منیر ایڈ و کیٹ نے کہا ہے کہ لا لچی جعلی ڈا کٹر مر یضوں کے ور ثائ کی پر یشا نی کا بد تر ین فا ئدہ اٹھا تے ہیں ان کے گھر کے ز یور تک بکوا د یتے ہیں ، حا جی محمد سرور نے کہا ہے کہ کا لی بھیڑوں کی ملی بھگت کے بغیر جعلی ڈا کٹرپر یکٹس کر ہی نہیں سکتے یا پھر ان کے خلاف قا نو ن نا فذ کر نے وا لے عوا م کو قبر ستا نوں میں پہنچا نا چا ہتے ہیں حکو مت فوری تو جہ دے مر یض مبارک علی نا بتا یا کہ وہ اس سے پہلے دو پرا ئیویٹ ہسپتا لوں میں علا ج کرا چکا ہے صرف ان کے یجنٹ ہو تے ہیں جو اد ھر پہنچا تے ہیں مر یضہ سکینہ بی بی ، مر یض اللہ یا ر ، مر یضہ تہمینہ اسلم نے بتا یا کہ گفٹ پیکج پو رے کر نے کیلئے فا لتو دوا ئیاں لکھ کر ہزاروں جا نیں اور لو گوں کی حلا ل کی کما ئی اڑا ئی جار ہی ہے حکو مت نو ٹس لے۔

یہ بھی پڑھیں  حجرہ شاہ مقیم:قحبہ خانو ں اور فحاشی کے اڈوں پر پولیس کا کریک ڈاؤن

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker