تازہ ترینسائنس و آئی ٹی

وارد کو فور جی ایل ٹی ای کیلئے منظوری لینا ہوگی، پی ٹی اے

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) وارد ٹیلی کام تھری جی اور فور جی لائسینس یافتہ کمپنیوں سے مقابلہ کرنے کے لیے جدید ترین فور جی ایل ٹی ای حاصل کرنے کا منصوبہ بنارہا ہے تاہم پاکستان ٹیلی کام اتھارٹی کا کہنا ہے کہ قوانین کے مطابق اسے اس نئی سروس کو شروع کرنے کے لیے اتھارٹی کی اجازت کی ضرورت پڑے گی۔چونکہ وارد نے حال ہی میں ہونے والی تھری جی اور فور جی کے لیے نیلامی میں حصہ نہیں لیا تھا، پی ٹی اے دیگر کمپنیوں کے مفاد کو مدنظر رکھتے ہوئے ممکنہ طور پر وارد کو فور جی ایل ٹی ای لانچ کرنے کی اجازت نہیں دے گی۔ پی ٹی اے کے ایک افسر نے میڈیا کو بذریعہ ای میل بتایا کہ ‘وارد کا موجودہ لائسینس ‘ٹیکنالوجی نیوٹرل’ ہے جس کا یہ مطلب نہیں کہ یہ ‘سروس نیوٹرل’ بھی ہوگا۔ لانچ ہونے والی نئی سروسز کے لیے پی ٹی اے کی اجازت لازمی ہے۔ وارد کو اس حوالے سے باضابطہ طور پر درخواست دینی پڑے گی۔ افسر کا کہنا تھا کہ پی ٹی اے اس درخواست کا جائزہ لے گا اور موبائل انڈسٹری کے بہتر مفاد میں فیصلہ سنائے گا۔ وارد ٹیلی کام کے ایک افسر نے میڈیا کو بتایا کہ وارد کے لائسینس کی وجہ سے فور جی ایل ٹی ای کو لانچ کرنے لیے کمپنی کو پی ٹی اے کو صرف مطلع کرنا پڑے گا کیوں کہ وارد کے پاس ضرورت کے مطابق اسپیکٹرم موجود ہے۔ تاہم پیر کے روز پی ٹی اے نے میڈیا کو بتایا کہ وارد کا لائسینس ‘سروس نیوٹرل’ نہیں اور اسے پی ٹی اے سے منظوری لینا پڑے گی۔

یہ بھی پڑھیں  سیالکوٹ: امت مسلمہ وقت کی نزاکت کو سمجھتے ہوئے اپنے اختلافات کو بالا طاق رکھتے ہوئے اپنی صفوں میں اتحاد اور اتفاق پیدا کریں، محمد نفیس گوہر ڈی پی او سیالکوٹ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker