پاکستان

پاکستان اورآزادخطہ کےعوام کے درمیان روحانی اورجذباتی بندھن کی جڑیں انتہائی مضبوط ہیں،یوسف رضا گیلانی

میرپور﴿نامہ نگار﴾ وزیراعظم سیدیوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ پاکستان اور آزاد خطہ کے عوام کے درمیان روحانی اور جذباتی بندھن کی جڑیں انتہائی مضبوط ہیں ۔ آزاد کشمیر کی ترقی اور عوام کی خدمت ہمارے ترجیحاتی ایجنڈا میں شامل ہے موجودہ تیز رفتار گلوبلائزیشن کے چیلنجز کا مقابلہ کرنے کیلئے تعلیم اور ٹیکنالوجی  کو فروغ دینا ہوگا ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے  میرپور یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی  کا سنگ بنیاد رکھنے کے موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ وزیراعظم نے کہا کہ میرپور یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی جیسے میگا پراجیکٹ  کا سنگ بنیاد رکھنے پرانہیں بے حد خوشی محسوس ہورہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر کے ہر دورہ پر انہیں دلی اطمینان حاصل ہوتا ہے اور یہ یاد تازہ ہوجاتی ہے  کہ پاکستان اور آزاد خطہ کے عوام کے درمیان روحانی و جذباتی  بندھن کی جڑیں مضبوط ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت نے برسر اقتدار آتے ہی آزاد خطہ کی ترقی اور اس کے عوام کی خدمت کو اپنے ترجیحاتی  ایجنڈے میں رکھا ۔ انہوں نے کہا کہ انہوں نے آزاد خطہ کے زلزلہ متاثرہ علاقوں کی بحالی اور تعمیر نو میں ذاتی دلچسپی  لیتے ہوئے اس بات کو یقینی بنانے کی کوشش کی کہ تعمیر نو پر پراجیکٹوں کے تمام ضروری وسائل کا اجرائ جاری رکھا جائے  انہوں نے کہا کہ یہ بات خوش آئند ہے کہ اکثر ترقیاتی منصوبے مکمل ہوچکے ہیں جبکہ دیگر تکمیل کے مراحل میں ہیں انہوں نے کہا کہ خطے میں صحت اور تعلیم جو کہ زلزلے کے باعث سب سے زیادہ متاثر ہوئے کی بحالی و تعمیر نو ان کی توجہ کا اہم مرکز ہے  انہوں نے کہا کہ کشمیری عوام کی فلاح وبہبود  کے لیے کام کرنے کا ہمارا عزم پاکستان اور آزاد کشمیر کے درمیان گہرے تاریخی ، جغرافیائی  ، ثقافتی اور مذہبی تعلقات کے قیام کا عکاس ہے  انہوں نے کہا کہ کشمیری عوام سے محبت ہر پاکستان کے خون میں رچی بسی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ  بانی پاکستان قائداعظم محمد علی جناح  اور قائد عوام شہید بے نظیر بھٹو کی جانب سے کشمیری عوام کے ساتھ جذباتی و روحانی وابستگی کا دیا گیا سبق بھی ہمارے ذہنوں میں اچھی طرح نقش ہے جسے ہماری آئندہ نسلیں  بھی قائم رکھیں گی انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی مسئلہ کشمیر کو اجاگر کرنے کی بانی ہے اور کشمیری عوام کی بہبود ہمارا ہمیشہ عزم رہے گا ۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت دنیا تیزی سے بدل رہی ہے  گلوبلائزیشن  نے کھیل کے نئے قوانین اور راستے ہموار کردیئے ہیں جو کہ گلوبل  معیشت اور سیاسی  ڈھانچے کی تشکیل  دینے کیلئے گائیڈ لائن دیتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں  اس تیز رفتار  گلوبلائزیشن کے دور میں  اپنی جگہ بنانے کیلئے توانائی ، ہمت اور جدت کی نئی راہوں کی ضرورت ہے  انہوں نے کہا کہ ہمیں اس وقت یہ فیصلہ کرنا ہوگا کہ ہم ہچکچاہٹ کا مظاہرہ کرتے ہوئے موجودہ تیز رفتار گلوبلائزیشن کو اپنے اوپر حاوی ہونے دینگے یا پھر اس دوڑ میں شامل ہوتے ہوئے چیلنجز کا ڈٹ کر مقابلہ کرینگے ۔ انہوں نے کہا کہ ہماری جمہوری حکومت  اداروں کو بااختیار بنانے کیلئے کام کررہی ہے  انہوں نے کہا کہ کسی بھی قوم کی خوشحالی  اور ترقی کا انحصار اس کے تعلیمی معیار اور نوجوان نسل پر ہوتا ہے  انہوں نے کہا کہ آج  جدید ٹیکنالوجی کا دور ہے  اور اس کا مقابلہ صرف وہی اقوام کرسکتی ہیں جو اعلیٰ تکنیک ریسرچ  کے فروغ اور جدت کو اپنانے پر توجہ دیں انہوں نے کہا کہ تعلیم اس وقت ہمارے ملک میں زندگی یا موت کا معاملہ  ہونا چاہیے  اور ایسا اسی وقت ممکن ہوسکتا ہے  کہ ہم روایتی اور عام تعلیم کی بجائے  سائنس ، انجینئرنگ اور ٹیکنالوجی  سے متعلقہ تعلیمی  اداروں کو فروغ دیں انہوں نے کہا کہ تباہ کن  زلزلے کے اثرات کو اب ہمارے ذہنوں  سے مٹ جانا چاہیے  اور ہمیں ایک نئے حوصلے کے ساتھ آگے بڑھنا چاہیے ۔ انہوں نے کہا کہ  زلزلہ سے ہونیوالی تباہی کے بعد ہمارے انجینئر طبقہ نے بحالی اور تعمیر نو کے حوالے سے انتہائی اہم کردار ادا کیا ۔ انہوں نے کہا کہ انجینئر سائنسدان اور ماہرین  ٹیکنالوجی ہمارا قومی اثاثہ ہیں  انہوں نے کہا کہ  وہ اس موقع پر اپنے سائنسدانوں  اور دیگر پیشہ ورانہ ماہرین کو یہ یاد دلانا چاہتے ہیں کہ ہمیں علاقائی اور عالمی سطح پر متعدد مسائل اور چیلنجز درپیش ہیں جن سے نمٹنے کیلئے  انہیں ذہانت پرمبنی فیصلے  کرنا ہونگے

یہ بھی پڑھیں  کیڈٹ کالج حسن ابدال میں صدر مملکت کا کالج پریڈ اور سالانہ پریڈ کا معائنہ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker