پاکستانتازہ ترین

صدر زرداری، نیٹو چیف راسموسن کے درمیان ملاقات ملتوی

شکاگو(مانیٹرنگ ڈیسک) نیٹو سپلائی کھولنے پر اختلافات برقرار، صدر زرداری اور نیٹو چیف راسموسن کے درمیان ملاقات آخری وقت پر ملتوی کر دی گئی۔ نیٹو سپلائی کھولنے پر اختلافات طے نہیں ہوپائے جس کے باعث صدر زرداری اور نیٹو چیف راسموسن کے درمیان طے شدہ ملاقات آخری وقت پر ملتوی کردی گئی تاہم صدارتی ترجمان کا کہنا ہے کہ ملاقات صدر زرداری کا طیارہ تاخیر سے پہنچنے کی وجہ سے ملتوی ہوئی ہے۔ نیٹو حکام نے ملاقات ملتوی ہونے کا اعلان صدر زرداری کے شکاگو پہنچنے کے دو گھنٹے بعد کیا۔ نیٹو ترجمان کا کہنا تھا کہ صدر زرداری کا طیارہ تاخیر سے پہنچا جس کی وجہ سے ملاقات نہیں ہوپائی۔ صدارتی ترجمان فرحت اللہ بابرنے اصرار کیا کہ ممکن ہوا تو ملاقات کا وقت دوبارہ طے کیا جائے گا۔ نیٹو ہیڈکوارٹرز کے حکام کا کہنا تھا کہ ملاقات ملتوی ہونے کہ وجہ ایجنڈے پر اختلافات ہیں۔ اگرچہ صدارتی ترجمان فرحت اللہ بابر کا کہنا ہے کہ نیٹو سپلائی کھولنے پر مذاکرات درست سمت میں جاری ہیں تاہم فرانسیسی خبر ایجنسی کے مطابق پاکستان اور امریکا کے درمیان نیٹو سپلائی کیلئے معاوضے کے معاملے پر اختلافات کھڑے ہوگئے ہیں۔ امریکی وزیر دفاع لیون پینیٹا نے ایک انٹرویو میں کہا کہ پاکستان کا ہر کنٹینر پر پانچ ہزار ڈالر کی ادائیگی کا مطالبہ بہت زیادہ ہے اورمعاشی بحران کی وجہ سے امریکا کیلئے پاکستان کو اتنی بڑی رقم کی ادائیگی ممکن نہیں۔ امریکی قومی سلامتی کے مشیر بین رہوڈز کا بھی کہنا تھا کہ نیٹو سپلائی کا معاملہ نیٹو کانفرنس کے موقع پر ہی مکمل حل ہونے کی امید نہیں تاہم ان کا

یہ بھی پڑھیں  ملک ریاض کے انٹرویو کی تحقیقات کے لیے کمیٹی قائم

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker