شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / پتوکی:مضر صحت اور کیمیکل سے تیار شدہ مصنوعی دودھ کی فروخت کا مکروہ دھندہ عروج پر

پتوکی:مضر صحت اور کیمیکل سے تیار شدہ مصنوعی دودھ کی فروخت کا مکروہ دھندہ عروج پر

پتوکی(نامہ نگار)پتوکی مضر صحت اور کیمیکل سے تیار شدہ مصنوعی دودھ کی فروخت کا مکروہ دھندہ عروج پر شہر اور گردونواح میں وسیع پیمانے پر تیار ہونے والا مصنوعی دودھ کی سپلائی پتوکی اور لاہور شہر کی مختلف دوکانوں اور شادی ہالز میں کی جانے لگی۔اعلیٰ حکام نوٹس لیں۔تفصیلات کے مطابق کیمیکل سے تیار شدہ مصنوعی دودھ کی فروخت سرعام جاری۔مضر صحت اور جان لیوا کیمیکل سے تیا رہونے والا دودھ ملاوٹ شدہ کھویا ، پنیر کے استعمال سے شہری موذی امراض میں مبتلا ہونے لگے نام نہ ظاہر کرنے پر ڈیر ی کے ملازم نے بتایا کہ دودھ میں بال صفا پاؤڈر ، یوریا کھاد، ناقص کوکنگ آئل ، سرف کا استعمال کیا جاتا ہے جب کہ مصنوعی دودھ بنانے کیلئے خشک دودھ ، سنگھاڑے کا پاؤڈر اور چند کیمیکل کا استعمال کیا جاتا ہے جن کی بدبو سونگھی نہیں جاسکتی ان سب چیزوں کو ملا کر خوش مکس کیا جاتا ہے اور سب سے آخر میں دودھ کا ذائقہ لانے کیلئے تھوڑی سی مقدار میں دودھ ڈالا جاتا ہے۔عوامی و صحافتی حلقوں نے پنجاب فوڈ اتھارٹی سے مطالبہ کیا ہے کہ انسانی جانوروں سے کھیلنے والوں کو قانون کے کٹہرے میں لاکر سخت سے سخت سزا دینی چاہیے۔

یہ بھی پڑھیں  نواز شریف کل اپنی اہلیہ کی تیماداری کیلئے لندن جائیں گے۔